Islamic Education

All About Islam

المومن

Facebooktwittergoogle_plusredditpinterestlinkedinmailFacebooktwittergoogle_plusredditpinterestlinkedinmail

 

المومن کا مطلب ہے ایمان اور سلامتی کی علامت۔ ویسے تو مومن کا لفظ انسانوں کے لئے استعمال ہوتا ہے مگر یہ لفظ قرآن میں ایک دفعہ اللہ کی ذات کے لئے استعمال ہوا ہےاور اللہ کی ذات سے منصوب اس لفظ کے تین مطلب ہیں۔ 

شاہد

 اللہ خود اپنے ہر وعدے کی اور قرآن میں کہی گئی ہر بات کی شہادت دیتا ہے کہ اس کتاب کا ہر لفظ سچا اور پورا ہونے والا ہے۔ 

محافظ

 اللہ سب کا محافظ ہے۔وہ ہر حال میں اپنی مخلوق کی حفاظت کرتا ہے۔ 

خوف میں حفاظت

اللہ اپنے ماننے والوں کو خوف اور زیادتی سے محفوظ رکھتا ہے۔  

المومن کی وضاحت 

اللہ المومن ہے  کیونکہ اللہ بس سلامتی اور حفاظت کا یقین نہیں دلاتا بلکہ حفاظت کرتا بھی ہے۔ اللہ صرف اپنے بیان کئے ہر لفظ کی شہادت نہیں دیتا بلکہ ان نعمتوں کے نزول کو یقینی بھی بناتا ہے۔اگر اللہ چاہے تو وہ ان باتوں سے انحراف بھی کر سکتا ہے مگر وہ ایسا نہیں کرتا۔ اس کی وجہ ہرگز یہ نہیں ہے کہ وہ کسی کا تابع ہے  بلکہ وہ ان اصولوں اور ضوابط کو اپنی ذات اور اپنی مخلوق کے لئے پسند کرتا ہے۔ اللہ  ان اصول و ضوابط کا بھی محافظ ہے۔ 

بھلائی کی ضمانت

اس نام کی معرفت سے اللہ دنیا اور آخرت کی بھلائی کی ضمانت دیتا ہے۔ اللہ ہی ہے جو انسان کو دماغی سکون بخشتا ہے۔ وہی ہے جو موت،زندگی اور قیامت کے وقت انسان کو سکون دیتا ہے۔ 

قرآن میں المومن کا ذکر  

وہ ہی اللہ ہے جس کے سوا کوئی  معبود نہیں۔ بادشاہ نہایت۔  پاک سب عیبوں    سے صاف۔   امن دینے  والا نگہبان غالب،   زورآور اور بڑائی والا پاک ہے   اللہ ان چیزوں سے جنہیں یہ  اس کا شریک  بناتے ہیں ۔ سورت الحشر آیت 23۔  

قرآن  میں اللہ کی شہادت  

اللہ تعالیٰ ، فرشتے اور اہل علم اس بات کی گواہی  دیتے  ہیں  کہ اللہ کے سوا   کوئی معبود نہیں  اور وہ عدل کو قائم رکھنے والا ہے ، اس غالب اور حکمت والے  کے سوا کوئی عبادت کے  لائق نہیں ۔ سورت آل عمران آیت 18  

المومن کا وسیلہ 

 جب انسان کسی خوف ،مشکل ہا پریشانی میں مبتلا ہو تو اس نام کا بے حساب ورد کرنا چاہیئے بیشک اللہ ہر خوف اور پریشانی سے نجات دے گا۔ 

 

اگر اس مکالمے میں ہم سے کوئی غلطی یا کوتاہی ہوئی ہے تو براہ مہربانی غلطی کی نشاندہی کر کے ہماری اصلاح میں مدد کیجیئے۔ اللہ ہماری چھوٹی بڑی غلطیوں کو معاف فرمائے اور ہماری اس کاوش کو اپنی بارگاہ میں قبول و مقبول فرمائے۔اللہ اس کاوش کو ہمارے خاندان کے لئے نجات کا موجب بنائے اور دین پر ہماری پکڑ کو اور مضبوط کرے. آمین  

Next Post

Previous Post

Leave a Reply

© 2019 Islamic Education

Theme by Anders Norén